The Moon Of Lunar Night Novel by Bella Bukhari – Episode 19

0
دی مون آف لونر نائیٹ از بیلا بخاری – قسط نمبر 19

–**–**–

 

ماما ۔۔۔۔
آیت ، حیات بیگم کو ڈھونڈ رہی تھی
کہاں ہیں آپ ۔۔۔؟؟؟
ماما ۔۔۔۔
جی میری جان کیا بات ہے ۔۔

ماما وہ ظہان بھائی کے ٹھیک ہونے کی خوشی میں میں اپنے ہاتھوں سے ان کے لیئے سپیشل ڈش بناو گی وہ ایکسایٹڈ ہو کر بتا رہی تھی ۔

حیات بیگم اسکی فرمائش سن کر پریشان ہوجاتی ہیں ۔
مگر آیت

ماما میں جانتی ہوں مجھے بھی پکانا نہیں آتا مگر میرا دل چاہا ہے میںاپنے کیوٹ سے بھائی کے کچھ پکاو آپ منع مت کریں پلیز ۔۔۔۔۔۔ماما

اوکے آیت بیٹا ۔۔۔

Thank you Mom
Love you 😘

مگر میری ایک شرط ہے ہے کوکنگ کے دوران میں آپ کے ساتھ رہو گی ۔

مگر ماما ۔۔۔
میں نے ریسیپی دیکھی ہے اور میکرونی بنانا بہت ایزی ہے میں بنا لوگی ڈونٹ وری ۔۔۔۔

آیت اگر آپ کوکنگ کرنا چاہتی ہیں تو میری بات ماننی پڑے گی ۔۔۔

اوکے ماما ۔۔۔
آپ نے اور کوئی آپشن بھی تو نہیں دیا مگر ان تینوں کو پتا نہ چلے ۔۔۔
اوکے ڈن بیٹا ۔۔۔

جب سب ڈنر کے لیئے بیٹھے ہوتے ہیں تو آیت اپنی ڈش لے کر سیدھی ظہان کی طرف جاتی ھے۔
واہ ۔۔۔کیا مزے کی خوشبو آرہی ہےماما کیا بنایا ہے پکایا ہے آپ نے ۔۔۔؟؟
فارب،ظہان اور شیری ایک ساتھ بولتے ہیں ۔۔۔

فارب بھیا آپ دور رہے یہ ڈش صرف میرٹ کیوٹ سے بھائی ظہان کے لیئے ہے جو کہ میں نے اپنے ہاتھوں سے بنائی ہے ۔

ظہان بھائی آپ جلدی سے ٹیسٹ کرکے بتایں ۔سچ میں آیت یہ آپ نے کوک کی ہے ۔۔۔
I can’t believe

ظہان جیسے ہی کھاتا ہے آیت بہت امید سے دیکھ رہی تھی کہ انہیں پسند آجائے ۔۔۔

زبردست
Delicious food
کیا ذائقہ ہے میری لٹل فیری کے ہاتھ میں ۔۔۔
سچ میں بھائی آپ کو پسند آئی ۔۔؟؟؟
بلکل ۔۔۔
Thank you soooòooòo much ferri for making this delicious dish…

My pleasure Zuhan bhai.

ماما یہ سراسر ناانصافی ہے کیا صرف ظہان ہی یہ ڈش کھائے گا ہمیں نہیں ملے گی۔۔۔۔؟؟؟

فارب سدا کا بھوکا انسان بالآخر ان دونوں بہن بھائی کا پیار دیکھ کر بول پڑتا ھے اور ظہان کو غصہ سے دیکھ رہا تھا ۔
آیت آنکھوں سے ظہان سے پوچھتی ھے کہ انہیں دے اور ظہان ہاں میں سر ہلاتا ہے ۔
ظہان شاہانہ انداز میں کہتاہے تم دونوں کیا یاد کرو گے کس سخی سے پالا پڑا ہے اور ڈش فارب کی طرف بڑھاتا ہے ۔

بہت بہت شکریہ بادشاہ سلامت ۔۔

فارب جل کر کہتا ہے اور تب ہی سکندر شاہ آتے ہیں ۔

ماما ویسے آپ دیکھ رہی ہیں میرے ساتھ انکا سوتیلے بھائی جیسا سلوک کرتے ہیں یہ تین لوگ ۔۔۔
صرف اور صرف آپ مجھے سے پیار کرتی ہیں اور یہ آیت اور ظہان اور شیری تو بلکل بھی پیار نہیں کرتے۔
فارب کے ایموشنل اٹیک کا کسی پر کوئی اثر نہیں ہوتا سب اسے اگنور کردیتے ہیں بس حیات بیگم ہاں میں سر ہلاتی ہیں کہ وہ فارب کے ساتھ ہیں ۔

بابا سائیں ۔۔۔آپ فارب کو چھوڑیں اس ڈش کو چکھے آیت نے فرسٹ ٹائم بنائی ہے ۔
ہہم ہماری بیٹی نے بنائی ہے تو اچھی ہوگی ۔سکندر شاہ بھی تعریف کردیتے ہیں مگر فارب کچھ نہیں کہتا ۔
فارب بھوکے کھاتے ہی رہوگے یا کوئی تعریف بھی کرو گے ۔۔۔۔

بلکل بیکار ہے کوئی ذائقہ نہیں ہے مجھے تو بالکل بھی پسند نہیں آئی ۔۔۔۔

ہاں اس لیئے ساری ڈش ختم بھی کردی تم نے ۔

ظہان بھائی دیکھیں کھانا بناتے ہوئے میرا ہاتھ جل گیا ھے اور فارب بھائی کیسے کہہ رہے ہیں کہ اچھی نہیں بنی آیت رونا شروع کردیتی ھے ۔
دیکھاو مجھے کہاں جلا ہے ہاتھ ۔۔؟؟
اف ہو ۔۔۔ظہان بھائی آپ سارا کھیل بگاڑ دیں گے کوئی ہاتھ نہیں جلا سمجھا کرے نہ ۔۔۔اووو اچھا اچھا ۔۔

تم چپ کرو آیت یہ تو ہے ہی بہت برا بھائی ۔۔۔

ارے آیت میری گڑیا میں تو مذاق کررہا تھا اپنا ہاتھ تو دیکھاو مجھے کہاں جلا ہے ۔۔۔
نہیں مجھے نہیں دیکھانا آپ میرے پاس مت آئیں ۔

ماما سچ میں بہت اچھی بنی ہے میرا تو دل چاہا رہا ہے میں صبح شام یہی کھانا کھاو سچ میں ۔۔۔۔

اب آیا نہ اونٹ پہاڑ کے نیچے ۔۔

شیری جو انکی شرارت سمجھ چکا تھا وہ بولتا ہے اور پھر سب ہنسنا شروع ہوجاتے ہیں اور جیسے ہی فارب کو بات سمجھ آتی ھے وہ بھی سب کے ساتھ ہنسنا شروع کردیتا ھے

حورا کی جب آنکھ کھلتی تو رات کا وقت تھا اٹھنے کے بعد وہ سیدھا باتھ روم جاتی ھے اور چہرے پر پانی کے چھینٹے مارتی ہے بہت ذیادہ رونے کی وجہ سے اسکی آنکھیں سوج گئی تھی ۔
تب ہی زوہیب صاحب روم میں آتے ہیں ۔
حورا ۔۔۔۔
کہاں ہیں آپ ۔۔۔پرنسز
وہ جو پھر سے رورہی تھی انکی آواز سن کر جلدی سے آنسو صاف کرتی ہے اور پھر نارمل ہوکر باہر آتی ھے ۔

جی پاپا ۔۔۔۔
ادھر میرے پاس آو ۔۔۔
وہ انکے پاس جاتی ہے اور دونوں میں کافی دیر خاموش کا وقفہ آگیا تھا ۔۔وہ اپنی اپنی سوچوں میں گم تھے ۔

“”حورا میری جان آپ جانتی ہیں اس دنیا میں سب سے زیادہ میں صرف آپ سے پیار کرتا ہوں
فیروزے بھی مجھے پیاری ہے مگر جو پیار مجھے آپ سے اس کا کوئی حساب نہیں ہے میں جانتا ہوں آپ سے پوچھے بغیر میں نے آپ کی زندگی کا بہت بڑا فیصلہ کیا ہے مگر آپ جانتی ہیں میں آپ کے لیئے کبھی بھی کوئی غلط فیصلہ نہیں لوں گا آپ کو پتا ہے جب آپکا رشتہ آیا تھا تو میری خوشی کی کوئی انتہا نہ رہی کیونکہ رشتہ بہت ہی اچھا تھا اور میں انکار نہیں کرسکا اور آپ دیکھئے گا آپ بہت خوش رہیں گی اور یقین ھے آپ میرا مان رکھے گی ۔””

آپ کو کوئی اعتراض ہے تو آپ مجھے بتا سکتی ہیں اس وقت آپ مجھے اپنا باپ نہیں بلکہ دوست سمجھے اور جو بھی بات آپ کے دل میں ھے وہ مجھ سے شیئر کرسکتی ہیں اور آپ کی رائے کو پہلے فوقیت دی جائے گی ۔۔۔

“پاپا مجھے معلوم ہے آپ نے میرے بارے جو بھی فیصلہ لیا ہوگا وہ اچھا ہوگا اور آپ کا حکم سر آنکھوں پہ ۔۔۔
مجھے یہ رشتہ منظور ہے ۔”

I m proud of you my prinxes Hurra….

میں جانتا تھا کہ آپ میری بات ضرور مانے گی ۔۔ پہلے تو آپ کی ممی آپ سے خود بات کرنا چاھتی تھی مگر میں نے روک دیا ۔وہ حورا کے ماتھے پہ پیار کرتے ہیں اور حورا ان کے کاندھے پر اپنا سر رکھتی ہے تب ہی فیروزے روم میں انٹر ہوتی ھے ۔
پاپا آپ مجھے بھول گئے آپ بس بجو سے پیار کرتے ہیں ۔۔
ارے نہیں میری جان ادھر میرے پاس آو اور وہ اپنی دونوں پرنسز کو اپنے بازوں میں بھر لیتے ہیں ۔
پاپا آپ نے اتنی جلدی بجو کا نکاح کیوں رکھا دیکھئے سارا دن گز گیا اور مجھے کوئی بھی ڈریس نہیں ملا ۔۔۔اب آپ بتائیں میں کیا پہنوں گی کل نکاح پہ ۔۔۔۔

رخسانہ بیگم تب آتی ہیں ۔۔

باپ بیٹیوں کا باتوں سے دل بھر گیا ہوں تو چل کر ڈنر کرلیں ۔

ارے بیگم آپ کیوں جیلس ہورہی ہیں ۔۔
حورا اور فیروزے ہنسنے لگ جاتی ہیں ۔۔۔

میں کیوں ہونے لگی ویسے آپ صرف اپنی بیٹیوں سے پیار کرتے میری تو آپ کی زندگی میں کوئی اہمیت ہی نہیں ۔۔۔

پاپا جلدی جائیں ممی ڈارلنگ آپ سے ناراض ہوگئی ہیں آپ جاکر انہیں منائیں ۔میں اور بجو آجائیں گے ۔

ارے بیگم بات تو سنیں ۔۔۔۔

بجو ۔۔۔
ہہم ۔۔۔
آپ کی آنکھیں اتنی ریڈ کیوں ہورہی ہیں؟؟ ادھر دیکھیں میری طرف ۔۔۔۔

وہ ۔۔وہ ہاں مجھے الرجی ہوگئی ہے اس لیئے آنکھیں ریڈ ہوگئی ہیں تم پریشان نہ ٹھیک ہوجائے گی ۔۔۔

بجو آپ خوش تو ہیں نا ۔۔۔؟؟؟
حورا مسکراتی ہے ۔۔
پتا نہیں کیوں آپ مجھے خوش نہیں لگ رہی ۔۔۔

تم بتاو فیروزے تم تو خوش ہو۔۔۔؟؟؟

میں بہت زیادہ خوش ہوں میں نے تو سوچ لیا ہے کونسا ڈریس کونسے فنکشن پر پہننا ہے ۔۔

اگر میری بہن خوش ہے تو میں بھی خوش ہوں ۔۔

فیروزے ۔۔۔
حورا ۔۔۔
جلدی آو کھانا ٹھنڈا ہو جائے گا ۔
آئ ممی ۔۔۔
چلیں بجو تم چلو میں بس آرہی ہوں ۔

حورا ساری رات جاگ کر گزارتی ہے اسکے ذہن میں پاپا کی باتیں بار بار آرہی تھی اور دوسری طرف ظہان کا چہرہ بار بار آنکھوں کے سامنے آرہا تھا فیصلہ بہت مشکل تھا مگر کرنا تو تھا ۔
وہ پیار کو قربان کرتی ہے اور اپنے پاپا کے فیصلے پر سر تسلیم خم کرتی ہے مگر ایسا کرتے ہوئے وہ کس اذیت سے گزرتی یہ بس وہی جانتی تھی ۔

اگلے دن فیروزے دوبارہ شاپنگ کرنے جاتی ہے مگر اسے اپنی پسند کا ایک بھی ڈریس ملتا وہ انتہائی غصے اور غم کی حالت میں واپس اتی ہے اور اپنے پاپا کو کال کرتی ھے
اور وہ اسے ڈریس بھیجنے کا کہتے ہیں شام تک ڈریس آجائیں گے آپ پھر سلیکٹ کر لیں ۔۔
اوکے پاپا بائے ۔۔۔

بجو آپ کے سسرال نے بیوٹیشن بھیجی ہے آپ کی بیوٹی ٹریٹمنٹ کریں گی ۔۔۔
وہ بیوٹیشن آتی ہے اور سلام کرتی ہے جسکا حورا سر ہلا کر جواب دیتی ہے ۔
ماما سے کہو مجھے کسی بیوٹیشن کی ضرورت نہیں ہے میں ایسے ہی ٹھیک ہوں آپ جاسکتی ہیں وہ لڑکی بس حیران ہوکر اس خوبصورت مگر روٹھی ہوئی معصوم سی پری دیکھ رہی تھی ۔

مگر بجو ۔۔۔
فیروزے جو کیا ہے وہ کرو اور مجھے کچھ دیر کے لیئے اکیلا چھوڑ دوں ۔
اوکے بجو ۔۔

وہ لڑکی حورا کی ممی کو کہتی ہے ۔۔۔
میم آپ کی بیٹی بہت ذیادہ خوبصورت ہیں اور ان پر غرور بہت جچ رہا تھا اور ویسے بھی انکی سکن بہت فریش ہے انہیں ان سب چیزوں کی ضرورت ہی نہیں ۔۔۔

پھر بھی آپ بیٹھیں ڈریس کی سیٹنگ کے لیے تو آپ کی ضرورت پرے گی جی میم میں یہی ہوں ۔۔

فیروزے تم ایسے پھر رہی ہو لڑکی آخر مسئلہ کیا ہے تمہارے ساتھ ۔۔۔
ممی پہلے میں ڈیکوریشن دیکھ لوں پھر تیار ہونے چلی جاو گی ۔۔۔

جو کرنا ہے جلدی کرو اور حورا کے پاس کھانے کے لیئے کچھ لے جاو وہ صبح سے بھوکی ہے۔۔اوکے اوکے ممی آپ ریلیکس ہوجائیں سب کچھ ہوجائے گا ۔

💞💞💞💞💞💞💞

دراب اپنی سیاسی سرگرمیوں میں بہت بزی ہوگیا تھا مگر حورا کی یاد سے ایک پل بھی غافل نہ ہوا تھا اسے بس الیکشن کے ختم ہونے کا انتظار تھا پھر وہ حورا سے شادی کا فیصلہ کرچکا تھا اور زوہیب صاحب نہ مانتے تو وہ زبردستی اسے اپنی زندگی میں شامل کرلے گا ۔ مگر دراب اس بات سے بے خبر تھا کہ حورا تو کسی اور کی قسمت میں شامل ہونے والی ھے ۔

اور دراب اور ظہان قسمت کے فیصلے سے انکار نہیں کرسکتے ۔

○○○○

–**–**–
جاری ہے
——
آپکو یہ ناول کیسا لگا؟
کمنٹس میں اپنی رائے سے ضرور آگاہ کریں۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Subscribe For Latest Novels

Signup for Novels and get notified when we publish new Novel for free!




%d bloggers like this: