The Moon Of Lunar Night Novel by Bella Bukhari – Episode 5

0
دی مون آف لونر نائیٹ از بیلا بخاری – قسط نمبر 5

–**–**–

 

ہیلو سلام علیکم ڈیڈ !
کیسے ہیں آپ؟

وسلام میرے شیر ۔۔۔۔ خیریت نہیں ھے۔۔۔۔ تم سے کچھ اہم معملات پر بات کرنی ھے ۔۔ تم بس جلدی سے ہمارے پاس آو ۔ہمیں ہماری پارٹی کو آپ کی ضرورت ھے ۔۔۔۔۔

I will come as soon as possible .you don’t worry dad.
K dad byee

نوید ۔۔۔۔۔۔
نوید
یس سر!
جلدی سے میری ٹکٹس بک کراو جس بھی ٹائم کی ملیں ۔ہمیں کل کی فلائٹ سے پاکستان جانا ھے ۔
اوکے سر،

جیسے ہی دراب خان ایئر پورٹ پر پہنچتا ھے فل پروٹوکول کے ساتھ خان حویلی پہنچتا ھے ۔
جہاں دلاور خان اپنے بیٹے سے بغلگیر ہوتے ہیں ۔دراب خان اپنے خاندان کا واحد چراغ ھے جو کہ ایک خوبرو نوجوان ھے، اسکے براون گردن تک آتے لمبے بال ہیں جو اسکے لوک کو زرا منفرد بناتے ہیں ۔وہ خوبصورت ہونے کے ساتھ ساتھ نہایت ہی شاطر اور چال باز انسان ھے جو اپنے مخالف کو زیر کرنے کیلئے کسی بھی حد تک جاسکتا ھے ۔
🤍🤍🤍

کم آن بیگ بی اب اٹھ بھی جاو آپ کب سے ہم آپکو اٹھارہے ہیں اور آپ اٹھنے کا نام ہی نہیں لے رہے ۔
Big b plzzzzzzz wake up man ‘

ہممممممم اٹھ رہا ہو بس پانچ منٹ ۔
نو ہری اپ ہمیں بہت بھوک لگی ھے اور آپ اٹھ ہی نہیں رھے ۔
کیا اااااااا
ابھی تک تم لوگوں نے بریک فاسٹ نہیں کیا جس گیو می ٹو منٹس ۔میں ابھی فرش ہو کہ ایا

اور جیسے ہی فارب ریڈی ہو کہ نیچے آتا ھے تو پوری ڈائننگ ٹیبل خالی ہوتی ھے کھانے کیلئے کچھ بھی نہیں ہوتا ۔
شیری ابھی تک بریک فاسٹ ریڈی نہیں ہوا؟
یس برو
بٹ وائے؟

‘coz we want you cook for us.

ہم صرف آپکے ہاتھکا بنا ہوا کھانا چاہتے ہیں ۔

Ok then lests go

پھر فارب آیت اور شیری دونوں کیلئے ڈیفرینٹ ڈیشز بناتا ھے جسے سب مل کے اینجوائے کرتے ہیں ۔
🤍🤍🤍

ظہان حیدر شاہ نے جبسے پارٹی جوائن کی تھی حویلی تو کم ہی آتا تھا ۔کیونکہ وہ الیکشن کی وجہ کافی مصروف تھا ۔آج کئی دنوں بعد وہ حویلی آیا تھا اور سیدھا اپنی مما جانی کے پاس جاتا ہے جوکہ عبادت میں مشغول ہوتی ہیں اور وہ انکے فارغ ہونے کا انتظار کرتا ہے ۔
جیسے ہی وہ فارغ ہوتی ہیں تو ظہان حیدر شاہ کو سامنے دیکھ خوش ہوجاتی ھے ۔
ظہان میری جان میرا بیٹا آج اتنے دنوں بعد اپنی شکل دکھائی ۔میری تو آنکھیں ترس گئیں تھیں ۔
ظہان حیدر شاہ بہت عقیدت سے اپنی مما جانی کا ہاتھ چومتا ھے اور انکی گود میں اپنا سر رکھ دیتا ہے ۔
مما جانی میں نے بھی اپکو بہت مس کیا ۔اسلیئے آج حویلی جلدی گھر اگیا ۔اپکے ہاتھ سے کھانا کھائے کئی دن ہوگئے ۔
ہاں کیوں نہیں میری جان میں خود کھلا گی اپنے بیٹے کو اپنے ہاتھوں سے ۔ اور سناو کام کیسا جارہا ھے ۔سب ٹھیک ھے پارٹی کو جوائن کرنے کے بعد تھوڑا برڈن بڑھ گیا ھے اور ساتھ بزنیس کو بھی ساتھ سنبھالنا ھے
مگر بابا سائیں کا حکم بھی تو نہیں ٹال سکتا!
یہ تو بیٹا آپکےبابا کی برسوں سے خواہش ھے کہ آپکوسیاست میں شامل کرکے علاقے کے لوگوں سے قریب کردیں کیونکہ یہ اپکے خاندان کہ جدی پوشتی مرید ہیں جو سیدوں کی بہت قدر کرتے
کیونکہ وہ سمجھتے ہیں سادات فیملی کا احترام، انکی عزت کرنا انکا فرض ھے ۔
اسلیے اپکے بابا سائیں اپکو انکے قریب رکھنا چاہتے ہیں ۔
جی مما آپ بلکل ٹھیک کہہ رہی ہیں ۔
اور پھر کافی دیر تک ظہان حیدر شاہ اپنی مما سے باتیں کرتا رہتا ھے اور انکی مما اسکے بالوں میں ہاتھ پھیرتے ہوئے اسکی باتیں سنتی رہتی ہیں ۔
ظہان بیٹا اب تم شادی کرلو ۔

تو آپ ڈھونڈیں کوئی اچھی سی پیاری سی جیسے آپکو اچھی لگے ۔

پر میں چاہتی ہوں لڑکی تمہاری پسند کی ہو جو ہمارے گھر کو جنت بنا دے ۔ ظہان حیدر شاہ اپنی مما سے باتیں کررہا ہوتا ہے تب ہی سکندر صاحب کمرے میں انٹر ہوتے ہیں اور دونوں ماں بیٹے کو دیکھ مسکرا اٹھتے ہیں ۔
کیا باتیں ہورہی ہیں ماں بیٹے میں؟
آپکو کیوں بتائیں یہ ہم ماں بیٹے کا معاملہ ھے ۔
دیکھ رہے ہیں ظہان اپنی مما کو آپ جب بھی انکے پاس ہوتے ہیں یہ اپنے مجازی خدا کو بھول جاتی ہیں ۔
ہمیں لگتا ھے اپکی مما ہم سے اب پیار نہیں کرتی ۔۔۔۔۔۔۔
شاہ جی کچھ تو سوچ کر بولا کریں بیٹے کہ سامنے ہی شروع ہوگئے
دونوں باپ بیٹے کا قہقہ گونجتا ھے
بابا سائیں اب ایسا تو اپ مت کہیں مما جانی جتنی آپ سے محبت کرتی ہیں شاید ہی کسی سے کریں ۔
I know zuhan she love me alot more than anything else .

لیکن مجھے انھیں تنگ کرنے میں مزا اتا ھے ۔
ظہان حیدر شاہ تو میری جان اور آپسے کس نے کہا میں آپ سے محبت کرتی ہوں میں صرف اپنے بیٹے سے محبت کرتی ہوں ۔
فردوس بیگم نے بھی سکندر شاہ کی ٹانگ کھینچتی ہیں اور کھانے کا کہہ کر وہاں سے چلی جاتی ہیں ۔
اور پیچھے ظہان اور سکندر شاہ کا زور دار قہقہ گونجتا ھے ۔
🤍🤍🤍

آپ بتائیں الیکشن کی تیاریاں کیسی جارہی ھیں ، کوئی مسئلہ تو نہیں ۔۔۔۔۔۔
نہیں بابا سائیں سب کچھ ٹھیک ھے اور اگر کوئی مسئلہ ہوا بھی تو ظہان حیدر شاہ اسے حل کرنا جانتا ہے ۔
مجھے پورا یقین ھے اپنے شہزادے پر اور آپکی قابلیت پر اور انشاءاللہ آپ یہ الیکشن ضرور جیتیں گے ۔
اور ہاں کل دعوت عام ھے اور اس میں آپ کا ہونا بہت ضروری ھے ۔ علاقے کہ لوگوں سے بھی ملاقات ہوجائے گی اور کچھ اہم لوگوں سے بھی ملاقات ہوجائے گی ۔
پارٹی کہ عام وخاص سبھی لوگ ہونگے جو آپکو مخالفین کے بارے میں اہم معملات سکھائیں گے ۔
سیاست کہ بارے میں علم ہو اتنا ہی کم ھے ۔
کیونکہ کوئی نہیں جانتا مخالفین کب اور کس وقت چال چلیں ۔

جی بابا سائیں!
جب تک آپکا سایہ ہم پر ھے کوئی بھی ہمیں کسی قسم کا نقصان نہیں پہنچا سکتا ۔

اور ہاں بابا سائیں مجھے پرسوں اسلام آباد جانا ھے بہت اہم میٹنگ ھے جس سے ہماری کمپنی کو بہت فائدہ ہوگا اور ہماری کمپنی کی ٹاپ ٹین میں پوزیشن برقرار رھے گی ۔
اوکے بیٹا جیسے آپکو ٹھیک لگے

🤍🤍🤍

آج کافی دنوں بعد رات کے کھانے پر حورا کی سب سے بات ہوتی ھے
حورا بیٹے سٹڈی کیسی جارہی ھے کوئی پرابلم تو نہیں ھے ۔

نہیں پایا کوئی پرابلم نہیں بس تھوڑی ٹف ھے کیمسٹری پر اچھی ہورہی ھے پڑھائی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آئے دن اسائنمنٹ بنا کہ تھک جاتی ہوں یو نو پاپا مجھے ہر چیز کو پرفیکٹ رکھنا پسند ھے اسلیے باقی لوگوں سے زیادہ توجہ اور محنت کرنی پڑتی ھے ۔۔۔۔۔۔۔
اور
فیروزے آپ بتائیں
اف پاپا نہ پوچھیں بس کیا بتائوں مڈ کے ایگزام نے میرا جینا محال کیا ہوا ھے ایک منٹ کی فرصت نہیں کہ میں اپنی فیورٹ مووی یا ٹرکش سیریل یا فیورٹ گیم ای ون شاپنگ ہی کرلوں ۔
آپ جانتے ہیں کب سے میں نے شاپنگ نہیں کی مڈ ٹرم سے فارغ ہو جاو تو فرینڈز کے ساتھ شاپنگ پہ جاو گی ۔
لو جی اس نالائق سے سٹڈی کا پوچھو اور یہ شاپنگ پہ بات لے گئی کبھی تو بہن کی طرح ٹاپ کر پر نہ لیڈی ڈیانا نے تو فیشن کرنا ھے ۔

ہاہاہاہاہاہا
ہاہاہاہاہاہا ممی
میں نے تو بس پاپا کو وہی بتایا جو انھوں نے پوچھا
کیوں پاپا
ہاہاہاہاہاہا سہی بیٹے
اور ویسے بھی

I have no intrest in study

اور ٹاپ کس لئے کرو اگر میں نے ٹاپ کیا تو بجو بیچاری کا کیا ہوگا
بس اسلیئے میں نے اپنی جگہ انھیں دی ہوئی ھے
اور ویسے بھی مجھے پڑھنے کا شوق بھی نہیں یہ تو میں آپ دونوں کی وجہ سے پڑھ رہی ہوں
سن لیا زوہیب صاحب اپنی لاڈلی کی باتیں
اس لڑکی کا تو اللہ ہی حافظ ھے
نہ جانے کون اس نالائق سے شادی کرے گا
بس بھی کریں ممی میری فیروزے کو مت ڈانٹیں وہ تو بہت لکی انسان ہوگا جو میری شہزادی جیسی بہن لے جائے گا

ہاں بلکل
میں ہوں ہی اتنی پیاری وہ تو خوش قسمت ہو گا جو فیروزے سید کو اپنے نصیب میں پائے گا
بس آپ دونوں باپ بیٹی نے اسکو بیگارا ہوا ھے
اچھی بھلی تھی اور کیا بنا دیا اسے
Ha what u mean mum
You means I’m not a human being ? 😯

Yes!
You are not a human being ‘coz you’re a queen of Satan.

ممیییییییییی
پاپا دیکھا اپنی بیوی کو مجھےشیطان کی ملکہ بنا دیا 😒 آپ اپنی بیگم کو سمجھا دیں ویسے بھی میری اور انکی نہیں بنتی آپ ایسا کریں مجھے نئی والی مما لادیں
ویسے ممی آپ نے مجھے شیطان کی ملکہ بنا دیا ویسے میرا شیطان میرا کنگ کہاں ھے 🤔

فیروزے ےےے
Ok
Ok sorry mum you never know i love to teasing you .
‘coz you’re my darling 😘

ہاہاہاہاہاہا
دیکھا بیگم ہماری بیٹی آپ سے کتنی محبت کرتی ھے
ہاں وہ تو دکھ رہا ھے
کھانا کھانے کے بعد فیروزے اور حورا روم میں جانے لگتی ہیں کہ
رخسانہ بیگم فیروزے کو روک لیتی ہیں
فیروزے
جی مما !
آو میرے ساتھ برتن سمیٹو
ممی یییییییییی
کیوں میں نہیں
فیروزے ےےےےے
اچھا آرہی ہوں ممی
اور پھر فیروزے بیچاری پھنس جاتی ہے
حورا اور زوہیب صاحب فیروزے کی معصوم سی شکل دیکھ کہ ہنسنے لگ جاتے ھیں

🤍🤍🤍

ادھر کوئی کسی کی چوڑیوں کی طرح کھنکتی ہنسی کو چاہ کے بھی بھول نہیں پارہا تھا
Kizlarim
‘ Te echo de menos
‘Nos vemos pronto

مائی گرل
ائی مس یو ۔۔۔۔۔۔۔۔
بہت جلد ملیں گے ______

–**–**–
جاری ہے
——
آپکو یہ ناول کیسا لگا؟
کمنٹس میں اپنی رائے سے ضرور آگاہ کریں۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Subscribe For Latest Novels

Signup for Novels and get notified when we publish new Novel for free!




%d bloggers like this: